Khwaja Farooq Newly elected MLA talks to APP

آزاد کشمیر کے عوام نے مودی کے ساتھ خاندانی تعلقات رکھنے والوں کو یکسر مستر کردیا : خواجہ فاروق

اسلام آباد۔26جولائی (اے پی پی): پاکستان تحریک انصاف مظفرآباد آزاد کشمیر کےنومنتخب ممبرقانون ساز اسمبلی(ایم ایل اے) خواجہ فاروق نے کہا ہے کہ کشمیر کے عوام نے مودی کے ساتھ خاندانی تعلقات رکھنے والوں کو یکسر مستر کردیا ہے اور وزیراعظم عمران خان کی قیادت پر اپنے بھرپور اعتماد کا اظہار کیا ہے جو کشمیری قوم کے باشعور اور سیاسی فہم کا ثبوت ہے۔اتوار کو کشمیر انتخابات میں کامیابی کے بعد اپنی رہائش پر ’’اے پی پی‘‘ سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے خواجہ فاروق نے کہا کہ کشمیر کے الیکشن مسلم لیگ (ن) کی حکومت کے زیر انتظام ہوئے اس کے باوجود شکست خوردہ عناصر کا واویلا چور مچائے شور کے مترادف ہے کشمیری قوم نے انہیں ان کی بدترین کارکردگی کی وجہ سے مسترد کردیا۔

انہوں نے کہا کہ دس سال بعد میں نے مظفرآباد آزاد کشمیر کی اس نشست سے لیگی امیدوار کو شکست سے دو چار کیا ہے، آزاد کشمیر کے لیگی وزیراعظم نے دارالحکومت مظفرآباد میں زلزلے سے تباہی کے بعد اس کی نئے سرے سے تعمیر و ترقی پر کوئی توجہ نہیں دی۔ عالمی اداروں سے ملنے والے فنڈز ضائع کئے گئے یا خوردبرد کر لئے گئے۔ کشمیر سمیت مظفرآباد میں اس وقت سے حالات جوں کے توں ہیں کوئی ایک ترقیاتی کام گزشتہ دس سال میں نہیں ہوا ہم بنیادی انفراسٹرکچر پر توجہ دیں گے میرا مقابلہ ایک مافیا سے تھا جسے دس سال بعد شکست سے دو چار کیا بےروزگاری کا خاتمہ اور عمران خان کی سوچ اور نظریے کے مطابق سیاحت کا فروغ ہماری ترجیح ہوگا۔

انہوں نےمزید کہا کہ عمران خان کشمیر کے بارے میں ایک واضح اور دو ٹوک موقف رکھتے ہیں یہی وجہ ہے کہ پاکستان کے معاشی ماہرین کے مشورے اور پرزور اصرار کے باوجود انہوں نے بھارت سے بات چیت نہیں کی اور اپنا یہ مطالبہ دہرایا کہ بھارت پہلے پانچ اگست کے اقدامات واپس لے پھر مذاکرات ہوں گے۔ ’’اے پی پی‘‘ سے گفتگو کرتے ہوئے خواجہ فاروق نے کہا کہ پاکستان کے ایک سابق وزیراعظم نے اپنی نواسی کی شادی میں بھارتی وزیراعظم مودی کو بلایا، انہیں قیمتی تحائف دیئے جبکہ مودی کی والدہ کے لئے ساڑھیاں بھجوائیں اور اس طریقے سے کشمیری قوم کے زخموں پر نمک پاشی کی یہی وجہ کہ ووٹرز نے انہیں اب الیکشن میں یکسر مسترد کر دیا۔ خواجہ فاروق نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کے بارے میں عمران خان کا موقف دوٹوک اور واضح ہے یہی وجہ ہے کہ اب مسئلہ کشمیر بین الاقوامی سطح پر اجاگر ہوگا اور ان شاءاللہ بہت جلد کشمیر کی آزادی کا سورج طلوع ہوگا۔

راؤ محمد شاہد اقبال
Latest posts by راؤ محمد شاہد اقبال (see all)

اپنا تبصرہ بھیجیں